Urdu Poetry !! ( اُردُو شاعرى )


تری دسترس میں تھیں بخششیں‘ سو نہیں رہیں
مِرے لَب پہ حرفِ سپاس تھا‘ سو نہیں رہا

میرا عکس مجھ سے اُلجھ پڑا تو گِرہ کھلی
کبھی میں بھی چہرہ شناس تھا‘ سو نہیں رہا


———

چاہت بھرے وہ لفظ اور ہر لفظ میں دعا
مقروض کردیا ہے تمارے خلوص نے

———

مجھ سے تو پوچھنے آیا ھے وفا کے معنی
یہ تیری سادۃ دلی مار نہ ڈالے مجھ کو

———

یہ کِس نے مثلِ مہ و مہر اپنی اپنی جگہ
وصال و ہجر کو ان کے مدار میں رکھا

لہو میں ڈولتی تنہائی کی طرح خاور
ترا خیال دِلِ بے قرار میں رکھا


———

محبت کا فلسفہ
ھمم سے باھر ھے

———

سُرخ اینٹوں پہ ناچتی بارش
اور یادیں ہیں رُوبرو دیکھو

دل کی دنیا ہے دوسری دنیا
ایسے منظر کو باوضو دیکھو


———

جو زھر پی چکا ھوں تم ھی نے مجھے دیا
اب تم تو زندگی کی دعائیں مجھے نہ دو

———

رُوح کا جیسے زندگی پر ہے
دل پہ یُوں اختیار ہے اُس کا

جیسے آنکھوں کو روشنی کا ہو
یُوں مجھے انتظار ہے اُس کا


———

اب موسم گزر چکا شاید
میں محبت میں مر چکا شاید

———

وہی ہوا نا،بچھڑنے پہ بات آپہنچی

تجھے کہا تھا پرانے حساب رہنے دے


———

تھے جتنے ذائقے وہ اپنا لطف کھونے لگے
شجر پہ پات تھے جتنے ، وہ زرد ہونے لگے

———

پہلے دیکھا تھا جس محبت سے
اک نظر پھر وہی دوبارہ کر

———

بات تک کرنے کو گر اس شہر میں کوئی نہیں
کون سنتا ہے دلِ بیمار کی فریاد پھر